Khabardar E-News

اسلام آباد: بلوچستان سمیت ملک بھر میں 12 دوا سازکمپنیز کے لائسنس معطل

13

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اسلام آباد ( نمائندہ خصوصی ) ملک میں غیر معیاری ادویات تیار کرنے والی کمپنیوں کی شامت آ گئی۔ بدھ کو ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی کا غیر معیاری دوا ساز کمپنیز کے خلاف بڑا ایکشن لیاگیا اور ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی نے 5 لوکل دوا ساز کمپنیز کے لائسنس کینسل کر دیئے۔

محکمہ صحت کے ذرائع کے مطابق ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی نے 12 لوکل دوا سازکمپنیز کے لائسنس معطل کر دیئے۔جس میں سندھ کی پانچ، بلوچستان کی ایک دوا ساز کمپنی شامل ہے اس کے علاوہ خیبرپختونخوا کی 5، اسلام آباد کی ایک دواساز کمپنی کا لائسنس بھی معطل کردیاگیا ۔
لائسنس کی معطلی میں پنجاب کی 2، سندھ 2، اسلام آباد کی1 فارما کمپنی بھی شامل ہے – حکام کے مطابق دوا ساز کمپنیز کے خلاف ایکشن ڈریپ ایکٹ 2012 کے تحت لیا گیا۔
ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈاکٹر عاصم روف نے فارما کمپنیز کے خلاف کاروائی کی تصدیق کرتے ہوے کہا ہے کہ مذکورہ دوا ساز کمپنیز نے گڈ مینوفیکچرنگ پریکٹس کی خلاف ورزی کی۔
جبکہ دواساز کمپنیز کے خلاف کارروائی فیلڈ ٹیمز کی سفارش پر کی گئ ہے ۔ رپورٹ کے مطابق انسپکشن میں کمپنیز غیر معیاری دوا سازی کی مرتکب پائی گئیں۔
ڈاکٹرعاصم روف کے مطابق ملک میں عالمی معیار کی دواسازی کی دستیابی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔اسکی خلاف ورزی کرنے والوں سے سختی سے نمٹا جائے گا۔ جب تک غیر معیاری ادویات ختم نہیں ہونگے اس وقت تک غیر معیاری ادویات کے خلاف ملک گیر سطع پ آپریشن جاری رہے گا۔

Comments are closed.