Khabardar E-News

کوئٹہ میں پولیس وین کے قریب بم دھماکہ اہلکاروں سمیت 9افراد زخمی

84

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

دھماکہ اس وقت ہواجب پولیس موبائل معمول کی گشت پرتھی دھماکہ خیزمواد موٹرسائیکل میں نصب کیاگیاتھا،دھماکہ ریمورٹ کنٹرول سے کیاگیا
دھماکے کے بعد پولیس اور ایف سی کی بھاری نفری جائے وقوع پر پہنچ گئی اور علاقے کو گھیرے میں لے لیا ،علاقے میں زبردست خوف وہراس پھیل گیا
کوئٹہ(آن لائن)کوئٹہ میں پولیس وین کے قریب دھماکے سے 3 پولیس اہلکاروں سمیت  9افراد زخمی ہو گئے۔پولیس کے مطابق کوئٹہ کے اسپینی روڈ پر پاک ترک اسکول کے قریب اس وقت دھماکہ ہوا جب وہاں سے خروٹ آباد تھانے کی گاڑی گزر رہی تھی۔ دھماکہ خیز مواد ایک موٹر سائیکل میں نصب تھا جسے ریموٹ کنٹرول کے ذریعے استعمال کیا گیا۔دھماکے کے بعد پولیس اور ایف سی کی بھاری نفری جائے وقوع پر پہنچ گئی اور علاقے کو گھیرے میں لے لیا جبکہ زخمی پولیس اہلکاروں اور شہروں کو فوری طور پر سول اسپتال کوئٹہ منتقل کیا گیا۔اسپتال انتظامیہ کے مطابق دھماکے میں زخمی ہونے والوں کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ دھماکے میں زخمی ہونے والوں کی شناخت سب انسپکٹر نثار احمد، ڈرائیور خان محمد اور گن مین ارسلان کے نام سے ہوئی۔پولیس نے واقعہ کی تحقیقات شروع کر دی ہیں تاہم ابھی تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی۔صوبائی وزیر داخلہ میر ضیا اللہ لانگونے دھماکے کی مذمت کی اور ہونے والے نقصان پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ معصوم انسانوں کو دہشت گردی کا نشانہ بنانا انتہائی قابل مذمت ہے۔ وزیر داخلہ بلوچستان نے زخمیوں کے لیے جلد صحت یابی کی دعا کی۔گزشتہ ہفتے 15 اکتوبر کو بھی کوئٹہ کے علاقے سیٹیلائٹ ٹان نیو اڈا کے قریب دھماکہ ہوا جس میں ایک پولیس اہلکار شہید اور 10 افراد زخمی ہوئے تھے۔ یہ دھماکہ بھی پولیس موبائل کے قریب موٹرسائیکل میں نصب ریموٹ کنٹرول بم کی مدد سے کیا گیا تھا

Comments are closed.