Khabardar E-News

سابق وفاقی وزیر انسانی حقوق شیرین مزاری اسلام آباد سے گرفتار

5

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اسلام آباد ( خبردار نیوز ) اسلام آباد کے سیکٹر ای سیونن سے سابق وفاقی وزیر انسانی حقوق شیریں مزاری کوا گرفتار کرلیا گیا

بتایا گیا ہے کہ شیریں مزاری کو اینٹی کرپشن ڈیرہ غازی خان ٹیم نے گرفتار کیا،

ذرائع کے مطابق شیریں کی گرفتاری کے وقت اینٹی کرپشن کی ٹیم کو مزاحمت کا سامنا،

شیریں مزاری کو ان کے گھر سے گرفتار کیا گیا،

سابق وفاقی وزیر انسانی حقوق شیرین مزاری اسلام آباد سے گرفتار

اس کے بعد اسکی بیٹی  ایمان مزاری نے کہا کہ نامعلوم افراد نے گھر گھس کر انہیں اغواء گیا

اور اس سے لاپتہ کردیا گیا

اس موقع پر سابق وفاقی وزیر اطلاعات فواد حس چوہری نے بتایا کہا کہ شیرین مزاری کے پاکستان کے لیے

خدمات ہیں

انہوں نے جنرل ضیاء کے مارشل لاء کے خلاف جدوجہد کی ہے

شیرین مزاری کی گرفتاری کی اطلاع ملتے ہی پاکستان تحریک انصاف کے کارکن کوہسار تھانے پہنچ گئے

کوہسار مارکیٹ تھانہ کے ایس ایچ او کے مطابق شیریں مزاری کو ڈیرہ غازی منتقل کیا جا رہا ہے

 سابق وفاقی وزیر کے خلاف ڈیرہ غازی خان میں پرانی ایف آئی آر درج ہے

اس موقع پر صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوے سابق وفاقی وزیر سینیٹرشبلی فراز نے کہا کہ امپورٹڈ حکومت

اب تمام حدیں پار کر چکی ہےاور اب خواتین کو بھی نہیں چھوڑا جا رہا ہے

سابق وفاقی وزیر شیریں مزاری کی گرفتاری پر پارلیمانی لیڈر سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے ایک مذمتی بیان

میں کہا ہے کہ امپورٹڈ حکومت کی جانب سے ‏خودار لوگوں کو جیلوں میں ڈالا جارہا ہے

ہونا تویہ چاہیے تھا کہ سب سے پہلے  سے پہلے کرپٹ وزیر اعظم کو گرفتار کیا جانا چاہیئے

لیکن شیری مزاری سچ کی آواز ہیں جسے اٹھنے سے کوئی نہیں روک سکتا تاہم شیری مزاری کی گرفتاری

امپورٹڈ حکومت کی بوکھلاہٹ کا ثبوت ہے

دوسری جانب تحریک انصاف کی کار کنوں کی بڑی تعداد کوہسار تھانے کے باہر جمع ہوئی ہے جس سے

نمٹنے کے لیے بھاری نفری طلب کرلی گئی

Comments are closed.