Khabardar E-News

سابق سنئٹر نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی اوردیگر کی ضمانت منظور

15

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

کوئٹہ ( خبردار ڈیسک ) کوئٹہ کی ایک عدالت نے سابق سنئٹر اور بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) کے رئنما

حاجی لشکری رئیسانی اوردیگر کی ضمانت منظور کرلی ہے

ہفتہ کے روز سیشن کورٹ میں حاجی لشکری اور دیگر افراد پیش ہوے جس پر عدالت نے انکی 30 30 ہزار

کی ضمانت منظور کرلی ہے

اور کیس کی آئندہ سماعت 26 فروری تک ملتوی کر دی گئی

یاد رہے کہ دو ہزار اکیس میں لاپتہ افراد کی ریلی منعقد کرنے ہر مقدمہ قائم کرنے کےبعد حاجی لشکری ماما

قدید سیمت دوسو سے زائد افراد کے خلاف مقدمہ ہوا تھا

سابق سنئٹر نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی اوردیگر کی ضمانت منظور

اس موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوے نوابزادہ لشکری رہیسانی نے کہا کہ مجھ پر ایک سال پرانا کیس

دوبارہ سے شروع کیا گیا ہے۔ لیکن ہم حق پر ہے عدالت میں بار بار حاضری دے گی ۔

انہوں نے پولیس پر بھی تنقید کی اور کہاکہ لاپتہ افراد کے لیے ایک پرامن احتجاج ہورہا تھا جس پر ہم نے

انسانی ہمدردی کی بنیاد پر شرکت کی اور ہم پر الزام عائد کیا گیا ہے کہ ہمارے ریلی میں شرکت کی وجہ سے

کررونا کیسز بڑھ چکے ہیں

انکے مطابق جو حکومت ڈیلور نہیں کرسکتی وہ مخالفین کے خلاف ریاستی اداروں کو استعمال کرتے ہیں

انہوں نے کہا کہ لوگوں کو لاپتہ کرنے والوں کے خلاف آرٹیکل چھ لاگوں ہونا چاہئے ۔

نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی کے خلاف ایف آئی آرواپس لی جاے- طاہرایڈوکیٹ

اس کے بعد ایک ریلی نکالی گئی جو شہر کے مختلف شاہراہوں سے ہوتا ہوا کوئٹہ پریس کلب آکر ایک

مظاہرے میں تبدیل ہوا

مظاہرے کے شرکاء نے نوابزدہ لشکری رہیسانی کے حق میں پلے کارڈز اٹھاے رکھے تھے

انہوں نے مطالبہ کیا کہ سابق سنیٹر سمیت تمام افراد کے خلاف مقدمہ واپس لیا جاے

مظاہرین نے حکومت کے خلاف شدید نعرہ بازی کی اور کہاکہ مقدمہ واپس نہ لینے کی صورت میں سخت

لالحہ عمل اپنایا جاے گا

جس کی تمام تر زمہ داری موجودہ صوبائی حکومت پر عائد ہوگی

Comments are closed.