Khabardar E-News

بارکھان َ ، وکوئٹہ ڈیرہ غازی خان روڈ 30 گھنٹوں سے بند ، مسافر رول گئے ،کھانا پینا نایاب

69

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

کوہلو، بارکھان بلوچستان اور پنجاب کو ملنے والی قومی شاہراھ گزشتہ رات نیلی مٹی کے قریب گاڑی خراب

ہونے کے باعث بند ۔ دونوں اطراف کی ٹریفک معطل ۔ مسافروں مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا ۔

گزشتہ شام 4 بجے کے قریب نیلی مٹی پر گاڑی خراب ہونے کے باعث بلوچستان اور پنجاب کو ملانے والی

قومی شاہراھ بند بارڈر ملٹری پولیس کی لاپرواہی کے باعث روڈ کو وقت پر کلئیر نہیں کیا گیا

جس کے باعث دونوں طرف کی ٹریفک جام رکھنی سے راکھی منہ تک گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئی ۔

جبکہ 20 گھنٹے گزر جانے کے باعث مسافروں مریضوں اور ٹرانسپورٹرز کو شدید مشکلات کا سامنا ہے

خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے آج شام تک کوہ سلیمان کے پہاڑی سلسلے میں شدید بارشوں کا امکان ہے

جس کے باعث روڈ مزید دو روز تک بند رہے گا مسافروں اور ٹرانسپورٹرز کا کہنا تھا آئے روز یہ روڈ بند رہتا ہے جس سے مریضوں اور مسافروں کو شدید مشکلات کا سامنا ہوتا ہے
جبکہ کئی دن سے روڈ جام ہونے کے باعث بلوچستان کے کسانوں کی سبزیاں لوڈ ہوتی ہیں جو تمام سبزیاں گل سڑ کر ضائع ہو جاتی ہیں جس سے بلوچستان کے تاجران و زمینداروں کو اربوں روپے کا نقصان اٹھانا پڑا ہے
کیونکہ پنجاب کا پورا انحصار انہی سبزیوں پر رہتا ہے سبزیوں کی شاٹج کی وجہ سے سبزیوں کی قیمتوں میں بھی شدید اضافہ ہو جاتا ہے حکومت وقت کو چاہیے کہ وہ واحد قومی شاہراہ کے مسلے کا جلد سے جلد حل نکالیں کیونکہ اسی روڈ سے ہزاروں کی تعداد میں صرف بڑی ٹرانسپورٹ گزرتی ہے
جو پنجاب کا مکمل انحصار انہوں گاڑیوں پر ہوتا ہے ان تمام مسائل کے بچاؤ کے لئے اس شاہراھ کو ڈبل کیا جائے تاکہ اتنے بڑے برہان سے ملک کو بچایا جا سکے

Comments are closed.