Khabardar E-News

عمران ،شیرانی ملاقات میں ملک کی آزادی اور خودمختاری پر تبادلہ خیال

13

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اسلام آباد ( خبردار ڈیسک ) جمعیت علمائے اسلام شیرانی گروپ کے سربراہ مولانا خان محمد شیرانی نے

جمعہ کو سابق وزیر اعظم عمران خان سے بنی گالہ میں ملاقات کی

اس موقع پر سابق سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور ڈاکٹر شہباز گل بھی ملاقات میں موجود تھے

ملاقات میں ملکی سیاسی صورتحال اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیاگیا

جس میں جمعیت علمائے اسلام شیرانی گروپ کے سربراہ مولانا خان محمد شیرانی نے اسلاموفوبیا کے انسداد

اور پاکستان کی آزادی و خودمختاری کے تحفظ کے حوالے سے چیئرمین تحریک انصاف کی کاوشوں کوکی

زبردست خراج تحسین پیش کی

ارور کہا کہ عالمی سطح پر اسلاموفوبیا کے انسداد اور ناموس رسالت مآب صلی اللہ علیہ وسلم کے تحفظ کیلئے

عمران خان کی خدمات غیرمعمولی ہیں،

انہوں نے کہا کہ عمران خان کا تصورِ ریاستِ مدینہ اور اسکے قیام کیلئے کوششوں کو قدر کی نگاہ سے

دیکھتے ہیں،

اور عمران خان اتحادِ امت خصوصاً امتِ مسلمہ کو درپیش مسائل کا قابل عمل حل تجویز کرنے والے پہلے

مسلم رہنما ہیں،

مولانا شیرانی کے مطابق آزادی و خودداری کا علم بلند کرنے والوں کیخلاف سامراج نے ہمیشہ سازش رچائی

جاتی ہے

جس کے باعث ضمیرفروش اور ملت فروش گروہ سے نہیں حبِّ رسولِ مکرم علیہ السلام سے سرشار رہنما

سے نسبت چاہتا ہوں،

اور ملک و ملت کی سربلندی کی تحریک میں چیئرمین تحریک انصاف کے ساتھ ملکر اپنا حصہ ڈالیں گے،

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے مولانا شیرانی کے خیر سگالی کے جذبات کا خیرمقدم کرتے

ہوے پاکستان کلمتہ اللہ کی بنیاد پر معرضِ وجود میں آیا،

عمران ،شیرانی ملاقات میں ملک کی آزادی اور خودمختاری پر تبادلہ خیال

تاہم بدقسمتی سے اللہ کے سامنے جھکنے والوں کو غلام بنانے کی کوششیں کی جارہی ہیں،

انہوں نے واضع کیا کہ اقتدار کی بجائے اقدار اور قومی آزادی و خودمختاری کا تحفظ اہم ہے،

جس کے باعث امریکی اشاروں پر متحرک کٹھ پتلیوں کو قوم کے مستقبل پر غلامی کی تاریکیاں طاری کرنے

کی اجازت نہیں دینگے،

اور اہلِ مذہب و دانش سے آگے بڑھیں گے اور قومی حمیت و اثاثۂ مِلّی کے تحفظ کا فریضہ انجام دیں گے

Comments are closed.