Khabardar E-News

سبی میں دھماکہ 5 افراد شہید اور 19 زخمی ،تحقیقات جاری

8

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

سبی ( نامہ نگار ) سبی کے جیل روڈ پر پیر کو اس وقت لوکل ریسٹ ہاؤس کے قریب زور دار دھماکہ، جب

وہاں لوگوں کا رش زیادہ تھا

پولیس ذرائع کے مطابق دھماکے کے نتیجے میں اب تک پانچ افراد  شہید اور انیس افراد زخمی ہوے ہیں شہید

ہونے والوں میں دو ایف سی اہلکار اور تین پولیس سپاہی شامل ہیں

 زخمی ہونے والے افراد کو سول اسپتال سبی منتقل کردیا گیا جہاں بعض زخمہوں کی حالت تشویشناک بتائی

 گئی ہے جن میں چار شدید زخمیوں کو سول ہسپتال کوئٹہ منتقل کردیاگیا

زرائع نے بتایا کہ دھماکے کی اطلاع ملتے ہی سیکورٹی فورسز کی بھاری نفری نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر

علاقے کو گھیرے میں لے لیا

 تاہم اب سے تھوڑی دیر قبل ڈی پی او سبی دوستین دشتی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوے واقعہ میں  پانچ

سیکورٹی اہلکاروں کی شہادت کی تصدیق کرتے ہوے کہا کہ یہ ابتدائی تحقیقات سے معلوم ہوا ہے کہ خودکش

حملہ تھا

یاد رہے کہ صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی بھی ایک روزہ دورے پر آج سبی میلے کی اختتامی تقریب میں

شرکت کے لیےسبی پہنچے تھے

آج سبی میلے کی اختتامی تقریب میں صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی

ہے

اس موقع پر سیکورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے

جس کے باعث زیادہ جانی نقصان نہیں ہوا ہے

بم ڈسپوزل اسکوارڈ اور دیگر اداروں کی جانب سے تحقیقات کا عمل جاری ہے تاہم اب تک یہ معلوم نہ ہوساک

کہ دھماکہ کس چیز سے ہوا ہے

 اب تک کوئی گرفتاری عمل میں آئی ہے اور نہ کسی گروپ نے اس دھماکے کی زمہ داری قبول کی ہے

 وزیر صحت بلوچستان سید احسان شاہ اور سیکرٹری صحت بلوچستان نور الحق بلوچ نے سبی بم دھماکے کی

مذمت کی ہے

کوئٹہ میں جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ دھماکے کی  وجہ سے سبی ، شیخ زید ہسپتال کوٸٹہ ،

سول ہسپتال کوٸٹہ ، بی ایم سی ہسپتال کوٸٹہ اور ٹراما سینٹر میں ایمرجنسی نافذ کرکے تمام طبی عملے کو فوراً

طلب کر لیا

وزیراعلئ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو نے  سبی بم دھماکے کی مزمت کرتے ہوے  بم دھماکے میں قیمتی

جانی نقصان پر افسوس کا اظہارکیا ہے

اور ہدایت کی ۔زخمیوں کو علاج معالجہ کی بہترین سہولیات فراہم کی جائیں۔

وزیراعلئ نے کہا کہ۔دہشت گردوں نے سبی کے تاریخی میلے کو سبو تاژ کرنے کی کوشش کی کیونکہ سبی

میلہ کاشتکاروں مالداروں کے کاروبار اور عام آدمی کی تفریح کو زریعہ ہے ۔اور ۔دہشت گردی کا واقعہ محنت

کشوں کے روزگار کے خلاف سازش ہے۔

وزیراعلئ نے کہا کہ ترقی مخالف عناصر نہیں چاہتے کہ بلوچستان کے عوام ترقی کریں اور انہیں روزگار

ملے۔

تاہم ترقیاتی عمل کے خلاف ہر سازش کو ناکام بنائیں گے۔ اور عوام کے تعاون سے صوبے کو امن اور ترقی کا

گہوارہ بنائیں گے

انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے عوام ترقی اور روزگار چاہتے ہیں اور ترقی مخالف عناصر کے خلاف ہیں۔

وزیراعلئ نے  سبی شہر کی سیکیورٹی میں اضافے اور واقعہ میں ملوث عناصر کی گرفتاری کے لیۓ تمام

وسائل برؤے کار لانے کی ہدایت کی ہے

Comments are closed.